22

عمران خان کیخلاف غیر شرعی نکاح کیس قابلِ سماعت قرار سیشن عدالت نے محفوظ فیصلہ سنا دیا،چیئرمین پی ٹی آئی اور بشریٰ بی بی کو نوٹس بھی جاری کر دیا گیا

اسلام آباد (ڈیلی اردو نیوز نیٹ ورک ۔ 18 جولائی 2023ء) غیر شرعی نکاح کیس میں اہم پیشرفت،عدالت نے کیس قابل سماعت قرار دے دیا۔ تفصیلات کے مطابق ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن عدالت نے چیئرمین تحریک انصاف عمران خان اور بشریٰ بی بی کیخلاف عدت کے دوران نکاح کیس کا محفوظ فیصلہ سنا دیا۔ ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن عدالت کے سول جج قدرت اللہ نے فیصلہ سنایا۔ عدالت نے عمران خان کیخلاف غیر شرعی نکاح قابلِ سماعت قرار دے دیا،جبکہ عمران خان اور انکی اہلیہ بشریٰ بی بی کو 20 جولائی کیلئے نوٹس بھی جاری کر دیا گیا۔
یاد رہے کہ گزشتہ روز سول جج قدرت اللہ نے پی ٹی آئی کے چیئرمین عمران خان کیخلاف غیر شرعی نکاح کیس قابل سماعت ہونے پر فیصلہ محفوظ کیا تھا،عدالت نے محمد حنیف کی دائر درخواست پرسماعت کی۔

وکیل درخواست گزار کا کہنا تھا کہ چیئرمین پی ٹی آئی سے نکاح کے وقت بشریٰ بی بی کی عدت مکمل نہیں ہوئی تھی،چیئرمین پی ٹی آئی کا نکاح لاہور میں ہوا لیکن دونوں بنی گالا میں قیام پذیر تھے،دونوں نے پہلے نکاح کے بعد کافی وقت بنی گالا میں گزارا۔

درخواست گزار کے مطابق عمران خان اور بشریٰ بی بی نے سب کچھ جانتے ہوئے عدت میں نکاح کیا،وکیل درخواست گزار رضوان عباسی نے دلائل کے دوران مختلف عدالتوں کے فیصلوں کا حوالہ بھی دیا،عدالت نے درخواست گزار رضوان عباسی کے دلائل سننے کے بعد فیصلہ محفوظ کیا۔ قبل ازیں سیشن عدالت نے چئیرمین پی ٹی آئی عمران خان کے خلاف عدت کے دوران نکاح کیس پر دائر اپیل منظور کی تھی۔ سیشن جج اعظم خان نے غیر شرعی نکاح کیس قابلِ سماعت قرار دیا تھا،سیشن جج اعظم خان نے سول جج نصر من اللہ کے فیصلے کو کالعدم قرار دیا۔ 13 مئی 2023ء کو ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن کورٹ اسلام آباد نے عمران خان کے خلاف غیرشرعی نکاح کیس کی درخواست ناقابل سماعت قرار دے دی تھی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں